Categories
Social

Biggest Financial Problem in Pakistan

I think my biggest financial problem is I grew up poor asf so now that I make my own money I don’t know how to budget. I’m always gonna spend the extra penny for quality cause I can and I hate the feeling of being limited on what I can do bc of a price tag.

I had to mute this cause sheeeesh. Imma just say pls pay attention and take care of your mental health! Take some time when you need too, do things that make you happy, spend time with friends and family. We’re usually our own biggest enemy. My family is not poor, but my parents teach me to make money even i still am student right now, i do it by doing online surveys that pay me dollars for my needs. Than i think that’s enough money for me. I have the same issue. It’s a mixture of being afraid of not having the money for what you want & lack of self control. With the bar chart you can visually track where your spend is starting to exceed your income. And tbh I found visualizing savings helped it feel like a tangible thing.

This is jst me,i don’t care how long i’ve been financially stranded once i got the papers i bought all the nice things nt minding how tomorrow gone be. I’m always treating myself to nice things cause I never had nice things growing up. The financial freedom is liberating but the guilt is paramount cause there is constant anxiety I’m gonna go down a poverty path. This is a bit like how I feel too. Though I wouldn’t say we never had nice things, we were always careful about spending money. So when I bought a Switch for €300, I kinda felt guilty for spending so much money and worried that something’s going to happen.

My fam of 3 survived on child support grant (5 years). Then my NSFAS allowance below R800(4 years).R5k from a 1yr internship. Then R0 when it ended. R5k again in another 1 year. My relationship with money is inconsistent. I spend and save out of fear. I can relate to this. Hence when I got my first job, I was on a roll! I did everything I always wanted to do without a second thought. I was advised to save but never did. Now that I am running a business, I am seeing flames. I have def learnt many important lessons. Do a spreadsheet with a graph. Pop into it all your outgoings and incomings, graph it as a barchart. And have a section of forecasted savings, with Actual savings then graph as a line chart. Having the visual really helped me see how far we’d come in terms of savings.

I grew up poor and I’m still preeeetyy damn poor, but even with what little money I have, I learned a valuable lesson. Don’t cheap out on the quality of your food if you’re the one cooking it. It will be healthier and far more flavorful. Even if you spend an extra 10 dollars. Just remind yourself the difference between NEEDING something and WANTING something… start little and put 20’s or 100 dollars away every check pocket all that money in a savings and build your credit up. our credit score is absolutely essential. Write down, or use your phone, to create a budget-utilities, plastic, student loans, etc-and stick to that. Pay bills on time. It isn’t rocket science.

Read: Rich Dad Poor Dad and Your Money or Your Life. Live on less than you make. Quality last longer but cost more. I have had purses that cost more than the car I drove, cars don’t matter to me. Make a plan & stick to it. I’m the opposite, i grew up poor with 2 alcoholic parents. It made me a tightwad. I make sure I always have enough for rent, bills, and necessities. Although I go without luxuries like designer shit or the newest tech, I feel secure when I have money in the bank. No problem with that just moderate your spending and focus on saving/investing first and foremost after bills. I’d just sit down and write a monthly/weekly budget so instead of binge spending one day you will soon realize, oh if I take this spending.

Money from this week and save it up for next week or month I can buy this nice thing I wanted. Doesn’t matter if that’s a car or some nice clothes etc. if I have a goal of a purchase I want to make I have a spare account I’ll auto draft every month from.

Categories
Social

Pakistani Middle Class is 1 Hospital Bill Away from Poverty

If you live in Pakistan anywhere and are from middle class then you would relate to the fact that Pakistani middle class is 1 hospital away from poverty no matter whether you live in a city or in a town or in a remote village.

Reasons that I could identify:
1. Unemployment.
2. Affordability.
3. Awareness.
4. OPD expenses are not always covered.

Also, if your employer provides you health insurance, I hope you guys are “adequately” covered. Take care everyone. A healthcare system that prioritises treatments over outcomes, is not really centred on patients’ wellbeing. Nobody is concerned about health insurance. People can buy an expensive mobile phone, but won’t think of health insurance. That’s the tragedy.

Premium grows as you age or claim. Individual Medical insurance is a hoax. Only Employer paid or group ins works. After three premiums of no claim, ur premium will be jacked so much that u will opt out & the co keeps the 3 premiums. Every ins co has a specialized dept that works on this hit job. Live healthy. That’s why the vibrancy over the medical free requirement is becoming a thought process in the Indian politics.

38.8% of Indian population is outside of any insurance coverage,threatening to erode their savings with in a week’s stay at a pvt hospital ICU. AB-PMJAY is doing a commendable job in covering the lowermost 40% of the population,but still this 38.8% needs to be insured ASAP. We r having almost 90% cheaper healthcare expenses in India compares to US, and lot of govt facilities available free for almost all common cases.

Depends. Like one family I know, had to spend 18 lakhs when a member got Covid. 18 lakhs for 24 days. The person didn’t even survive. Then someone I know, whose father got cancer. Spent 1.2 crs to fail to save him. Even sold one of their house. I guess either you are a college going lad or you haven’t applied for a job where you do get insurance covered by the company bro period. Do you think its fair?

 

Categories
Social

بدترین ڈپریشن

کچھ عرصہ پہلے میں اپنی زندگی کے بدترین ڈپریشن پہ تھی جب مجھے ایک دوست کی اشد ضرورت تھی۔ لیکن تب میرے پاس کوئی دوست نہیں تھا۔ رشتے اپنی جگہ اہم ہیں لیکن دوست ہونا بہت ضروری ہے

اگر آپ کے دوست ہی نہیں
تو ضرور سوچئیے کہ ایسا کیوں ہے؟
یہ بھی اُس ڈپریشن جتنا ہی المیہ ہے
اور یہ دوست اس سوشل میڈیا پر تلاش مت کیجیے گا
ذرا ماضی کنگھالیں اور آبیاری کیجیے

سر ابھی ایف اے میں تھے کہ والد ( اللہ تعالیٰ کی ذاتِ مبارکہ میرے والدین سمیت جن کے بھی اس دنیا سے رخصت ہو گئے ہیں سب کی مغفرت فرمائے آمین ) سب سے پہلے روٹی کی فکر لگی والدہ اور دو چھوٹے بھائی تھے بھائیوں کی تعلیم اور روٹی کا کر سکے اب اپنے چھوٹے بھائی کے پاس ملازم ہوں

کافی حد تک میرا بھی کوئی دوست نہیں ہے اور وجہ بھی آپ والی ہی ہے لیکن الحمدللہ رب العالمین مجھے کوئی ٹینشن بھی نہیں ہے تقریباً بارہ گھنٹے ڈیوٹی ہے رات کی کام نہ ہونے کے برابر ہے وائی فائی لگا ہوا ہے اور ساری رات اسی پر گزر جاتی ہے

دوست کا ہونا بھی اہم ہے لیکن اس سے نکلنے کے لئے انسان کو خود ہی کوشش کرنا پڑتی ہے
دوست ہوں تو ان کی نصحتیں بھی بری لگتی ہیں

دوستی کیا ہے، کوئی ایسا جو آپ کی بات سنے اور آپ کو جج نہ کرے۔۔۔بہت مشکل سے ایسے دوست ملتے ہیں

چچا غالب کیا خوب فریاد کر گئے ہیں کہ
یہ کہاں کی دوستی ہے کہ بنے ہیں دوست ناصح
کوئی چارہ ساز ہوتا، کوئی غمگسار ہوتا

وہ جو قلمی دوست ہوا کرتے تھے وہ شاید اسی لئیے ہوتے تھے نہ اصلی نام کا علم ہوتا تھا نہ اتا پتہ ۔پوسٹ باکس پر خط لکھ بھیجو سب کہہ ڈالو

سب کا یہی حال ہے اپنے دوست اپنی فیملی میں اپنے بچوں میں ڈھونڈیں رشتوں وعدوں کی تجدید کردیں اولاد سے نیے سرے سے اک نئی دوستی کی شروواد کریں
یہی سب سے پائیدار ہے
ہم سو اوسط تین سے چار گھنٹہ ٹویٹر کو دے دیتے ہیں یہ فیملی کا کوالٹی ٹائم ہو سکتا ہے

اسلام فقط میاں بیوی کی دوستی کی اجازت دیتا ھے غیر محرم سے دوستی ہی دراصل گناہ کی اصل ھے

 

Categories
Social

Parking Fees Metropolitan Corporation Rawalpindi Issues Help

یہ راولپنڈی میں روڈ پہ گاڑی کھڑی کرنے کا بھتہ وصول کیا جارہاہے؟
یہ پارکنگ ہے
گاڑی کےزمہ دار نہیں
سامان گم ہو زمہ دارنہیں۔
“جگہ کی فیس وصول کی جارہی”۔

یہ جگہ کی فیس کیا ہوتی ہے؟اگرکوئی دوست سمجھاسکے۔

کمرشل مارکیٹ میں یہ مافیا عرصے سے سرگرم ہے25

پوچھوتوکہتےہم غریب لوگ ہیں۔ ٹھیکیدارسےپوچھو۔ٹھیکیدارکون ہےیہ نہیں بتاتے۔

پارکنگ فیس کے روٹس کی نیلامی ہوتی ہے۔

فیس لینے والے سے نیلامی، گزٹ ریکارڈ کی تصدیق کریں۔ یہ مہیا بھی کر دیتے ہیں۔

ترقی یافتہ ممالک میں بھی پارکنگ فیس فی گھنٹہ کے حساب سے ہوتی ہے۔

مقصد شہر، بازاروں میں گاڑیوں کا داخلہ محدود کرنا اور پبلک ٹرانسپورٹ سے سفر کو ترویج دینا ہوتا ہے۔

بھائی ہر چیز فری میں کھا کر عادت پڑ گئی ہے۔ ساری دنیا میں پارکنگ کے لئے پیسے دینے پڑتے ہیں۔ پنڈی تو مصروف شہر ہے پارکنگ کے پیسے تو بنتے ہیں

میرے بھائی یہ ہر جگہ یہی ہوتا ہے یہ آپ جس جگہ پارک کرتے ہیں اس کی پارکنگ فیس ہوتی ہے آپ کی گاڑی یا آپ کے سامان کی سکیورٹی فیس نہیں ہوتی

کمرشل مارکیٹ پنڈی میں یہ بھتہ خوری عرصہ دراز سے جاری ہے ۔۔ اس کے پس پردہ کرداروں کو سارا پنڈی جانتا ہے۔۔اس پارکنگ فیس کا پنڈی میونسپلٹی سے کوئی لینا دینا نہیں ۔۔ اس کا واحد حل انکار ہے۔۔۔اول تو میں ادھر جاتا نہیں لیکن اگر کھبی غلطی سے چلا جاوں تو سادہ سا انکار کر دیتا ہوں

جگاٹیکس مطلب بدمعاشی ٹیکس

ایک اندازے کے مطابق کراچی والے 6 ارب روپے ایک مہینے صرف پارکنگ بھتہ دیتے ہیں

جناب یہ کیا عوام کو ریلیف بھی نہیں دینا اور جیب سے مال بھی نکلوا لینا جب پیسے لے رہے ہیں تو ذمہ داری کیوں نہیں اور یہ ذمہ داری ٹھیکیدار کی نہیں آپ کی بنتی ہے کہ امن و امان قائم کرو ۔

ہم روزانہ یہ بھتہ دیتے ہیں پانچ منٹ بھی گاڑی پارک کر دیں یہ سر پہ سوار اوع مزے کی بات یہ کہ پیسوں کے ساتھ پرچی بھی واپس مانگتے ہیں

یہ تو پنجاب کے کسی بھی ہسپتال چلے جاو یا کسی پبلک مقام پر ایسا کوئی اسٹینڈ ہے تو انہوں نے پرچی پر یہی کچھ لکھا ہوتا ہے،
بھتہ صرف پنڈی نہیں ہر جگہ وصول ہوتا ہے

راولپنڈی میں آپ نے شاید یہ نیا نیا دیکھا ہے، کراچی کی عوام ایسے غنڈہ ٹیکس پچھلے ۳۰ سال سے بھر رہی ہے۔۔1

 

Categories
Social

پاگل کتے کے کاٹنے کا علاج

پاگل کتے کے کاٹنے کا
ایلوپیتھی میں بےشک اس کا کوئی علاج نہیں اور انجام موت ہے بلکہ ڈاکٹر حضرات لواحقین سے دستخط لے کے خود مریض کو زہر کا انجیکشن لگا دیتے ہیں کیونکہ مریض ہر کسی کو کاٹنا شروع کر دیتا ہے اور جس کو کاٹ لے اس میں بھی Rabies virus منتقل ہو جاتا ہے

یہ قبرستانوں میں پایا جاتا ہے یہ کنوار گندل کی طرح کا ہوتا ہے لیکن اسکے پتے پتلے اور لمبے ہوتے ہیں۔چراگاہ یا قبرستان سے مل جائے گا Agave Americana بس مریض کے ہاتھ میں پکڑا دیں وہ خود اسے کتر کتر کے کھانا شروع کر دے گا جوں جوں کھاتا جائے گا اور اس کا پاگل پن اور Rabies جاتا جائے

محترم خاتون براۓ مہربانی عام لوگوں کو گمراہ نہ کریں۰ اگر لوگ پاگل کتے کے کاٹنے کے فورا بعد وقت ضائع کیۓ بغیر ویکسین لگوا لیں اور ساتھ میں Immunoglobulin بھی لگوا لیں تو Rabies ہونے کا خطرہ ختم ہو جاتا ھے۰ زخم کو اچھی طرح تقریباً 30 منٹ تک صابن سے دھونا چاھیے۰

جی وہ آپ درست کہہ رہے ہیں لیکن دیہات وغیرہ میں اگر بروقت ویکسین نہ ملے تو ایسے ٹوٹکے میں حرج نہیں
تینوں بار صبح سے وضاحت دے چکی کہ دوست کے کہنے پر شئر کیا

کوئی علاج نہیں ہے؟ پھر یہ ریبیز ویکسین کیا شے ہے؟ آپ کو لگتا ہے کسی نے بہت غلط انفارم کیا ہے.

ہومیوپیتھی کی ایک دوائی ہے Lysin 1M اس کے 5 قطرے مریض کے منہ میں ڈال دیں اور ہر 3 گھنٹے بعد دہراتے رہیں جب تک مریض کے حواس نہ بحال ہوجائیں.

یہ دوا پاگل کتے کے رال سے ہی بنائی جاتی ہے

rabies بہت slow growing virus ہے۔ زخم سے دماغ تک پہنچنے میں کئ دن لگتے ہین۔ اسلئے کاٹنے کے فورا بعد ویکسین سے علاج ممکن ہے۔ ہاں اگر دیر کردی جائے اور علامات شروع ہو جائیں پھر لا علاج ہے۔

جسے پاگل کتا کاٹ لے، وہ فوراً نمک، چینی اور دودھ کا استعمال بند کر دے، تارا میرا کا تیل تھوڑی تھوڑی دیر بعد استعمال کرے، ایک ہفتہ لگاتار اس عمل پر کاربند رہے۔ اور ساتھ ویکسین بھی لگوا لے۔ انشاءاللہ افاقہ ہوگا۔

تاریخ میں ربیز سے صرف ایک شخص مرنے سے بچا ہے اور وہ انڈیا سے تھا ۔۔ باقی یہ غلط انفارمیشن شئیر نہ کرے اور نہ ہی تحقیق وغیرہ کا یہاں رواج ہے ۔۔بس کوئی بھی ٹرک لو اور اُسکے بتی کے پیچھے لگاؤ اس قوم کو

Categories
Social

Small Cockroach Problem in Karachi and Best Killer

So what is the best cockroach killer in Pakistan especially for those pesky small cockroaches which are hard to kill by powder or gel. Someone has rightly said that these cockroaches are so hard that they will even survive a nuclear Armageddon. 

Every year there is a season of small cockroaches in Karachi. These bastards are often found in kitchens. They run around at night when the kitchen light is on suddenly. They have given their bundle in every draw of the kitchen. These are hellish creatures. They are very annoying. I guess they breed well in hotter climates. That’s probably why they’re not there in Western European countries. But hey we have Hakimi magical powder for the cockroaches or lal baig as they are called in Pakistan.

The best treatment for this is a tube that is inserted into the corners and then slowly disappears. There is such a chemical in it that one dies after eating it while the rest come to eat the dead. And so it all ended. Boric acid, also called hydrogen borate, boracic acid, and orthoboric acid is a weak, monobasic Lewis acid of boron.

They used to come to my kitchen during every winter especially at the start and then in spring in Karachi. We used tube of different companies, which can be found online or at any general store in Lahore, Karachi, Rawalpindi. Because they enjoy insecticide spray as body spray. Don’t let dry flour fall into the kitchen. Keep the kitchen very clean and keep every food item completely covered. Apply the paste in a little bit in different places in tube.

The remedy of killing small or big or German cockroaches is actually very easy. The very simple solution which is battle tested is to mix boric powder and flour and knead it and make small tablets and apply it wherever they go, cupboards, shelves, kitchens, bottom of refrigerator, washroom etc. They will disappear in 4 to 6 days for sure. Boric powder can be found at any good grocery or chemical store. Combat max roach bait is also good. Another good medicine is Ze roach gel.

I have also found out that Advion cockroach killer gel bait tube which comes with a plunger is good too. But it doesn’t last for long. In Jodia Bazaar in Karachi, where there is a rice market, Cockroach medicine is available from there. Take them And spray once a week. Cockroaches will not appear after a month. That’s how I cleaned my kitchen. Now I just spray sometimes.

Categories
Social

Thandi Kheer and Garam Gulab Jamun

Someone sent me a photo of thandi kheer and garam gulab jaman the other day from Rawalpindi and it was simply yum. I immediately cooked a bowl full of kheer, put it in freezer and went out to buy fresh gulab jamun. I surprised my family with thandi kheer and then piping hot gulab jamun on top of it.

I believe this could be the national sweet dish of Pakistan.  We should package it and export it to the rest of the world in different flavours really. I was introduced to a Rawalpindi version of hot chocolate brownie and vanilla icecream in the form of thandi kheer and garam gulab jamun. Who tried this? It was somewhere in the streets behind Waris khan bus stop. Pindi boys will guide you if you are really keen.

Pehlwan Kheer, Bhabra Bazar. Never tried this ghulab jaman, kheer combo though but it looks yum according to one of social media comment. Gulab jamun with kheer or vanilla icecream best combo of all time. Is it in Banni/kartarpur area?? This is a heavenly combo for any sweettooth. I know it doesn’t seem or sound healthy and probably isn’t but then let’s enjoy the life while we are here as in Pakistan we don’t have much else to enjoy.

I think I also tried it out in Jalandhar street Gujranwala many years back but I might be wrong. There was also a shop in Lahore near Anarkali. But this is wonderful combination and looks really delicious. Another combo could be Gajar halwa plus Vanilla icecream. Why does it look like there is a sad face. or maybe it is my reflection for not being able to consume it. That was just a joke and said in jesting.

I did but only at your insistence. And I stand with my earlier statement of calling it a blasphemy of food. Everything is perfect apart from a cup of tea. This is served as sweet at walimas in Peshawar in some of the wedding halls. Tastes really good. Garam gulab jamun and vanilla ice cream is the way to go. This combo is very very popular in Rawalpindi but yet to catch on in rest of Pakistan.

 

Categories
Social

Pakistani Girls in Hostels : Drugs Parties and Dating

معاشرہ ترازو تصور کر لیں
امیر اور غریب ترازو کے دو پلڑے ہیں۔امیر کی ضروریات زندگی سے زائد مال کو غریب کے پلڑے میں ڈال کر ضروریات زندگی مہیا کرنا پلڑے کو برابر کرنا ہے۔
معاشرے کے ترازو کا یہ توازن قسطاس المستقیم ہے۔اور ہموار و متوازن معاشرہ صراط المستقیم

ہاسٹل جا کر لڑکا یا لڑکی اپنے والدین کی نگرانی سے محروم ہو جاتے ہیں
کم عقلی میں جیسی بھی صحبت میسر آتی ہے وہ اسی رنگ میں رنگ جاتے ہیں
کئی ہاسٹلز میں پراسیکیوٹرز بھی ہوتی ہیں جو خود کو سٹوڈنٹ یا جاب ہالڈر شو کروا کر پلان کے تحت بچیوں کو نشے اور غلط کاموں پر لگوا دیتی ہیں

اس طرح کی تصویریں اور میسجز ان لڑکیوں کے لئے بہت مشکل بن جاتے ہیں جو بڑےدل سے تعلیم حاصل کرنا چاہتی ہیں گھر والوں کی مخالفت کے باوجود۔ ماحول کو بہتر بنائیے نہ کہ تعلیم کو روکئے

جہاں تک بات تصاویر کی وہ شیئر نہیں کرنی چاہیئے اس سے برائی زیادہ پیھلتی ہے۔ لوگوں میں غلط تاثر جاتا ہے۔اور جہاں تک پرائیویٹ ہوسٹلز کی بات ہے زیادہ تر ہوسٹلز کے یہی حالات ہیں دور داراز سے لڑکیاں پڑھنے آتی ہیں پھر کوئی پوچھنے والا ہوتا نہیں اور آخر میں یہی حالات ہو جاتے ہیں

ہاسٹل جا کر لڑکا یا لڑکی اپنے والدین کی نگرانی سے محروم ہو جاتے ہیں
کم عقلی میں جیسی بھی صحبت میسر آتی ہے وہ اسی رنگ میں رنگ جاتے ہیں
کئی ہاسٹلز میں پراسیکیوٹرز بھی ہوتی ہیں جو خود کو سٹوڈنٹ یا جاب ہالڈر شو کروا کر پلان کے تحت بچیوں کو نشے اور غلط کاموں پر لگوا دیتی ہیں

ایسا سب کے ساتھ یا ہر کہیں نہیں ہوتا جناب۔ اور ہاسٹلز کیا مخصوص ہیں ؟ ڈیز سکالرز یا ورکرز میں بھی ایسا ہو سکتا۔

میں نے کب کہا کہ سب کے ساتھ ہوتا ہے؟
پہلے تو بالکل بھی نہیں ہوتا تھا لیکن پاکستان میں اب یہ رجحان تیز ہو رہا ہے
آج پڑوسی کے گھر میں اگ ہے تو کل یا پرسوں ہمارے گھر بھی آ سکتی ہے

’ٹرینڈی لائف‘ اور ’نام نہاد سوشل اسٹینڈنگ‘ بہتر بنانے کے چکر میں بہت تشویشناک صورتحال ہے

اپ کی تربیت خاندان بڑا میٹر کرتا ہے میں نے اپنی لائف ہاسٹل میں گزاری ہے اب تک! ایسا ماحول بھی ملا پر اللہ کا بڑا احسان ہے خود کو بچا کر رکھا بہت سی چیزوں سے ! اللہ بس اپنا کرم رکھے انسان پر

ماشاء اللّہ.. ٹھیک کہا آپ نے کہ خاندان بڑا میٹر کرتا ہے. آمین

بھائی یہ بھی باتیں ہی ہیں

انسان جب بالغ ہو جاتا ھے وہ اپنا اچھا برا خود سلیکٹ کرتا ھے

اپکا کیا خیال ھے کہ ایسی حرکتیں کرنے والے سب لوگوں کے خاندان گندے ہوں گئے

بھائی اگر انسان نسلی ہوگا تو اسکی عادت و اطوار بھی اس بندے سے بہتر ہونگی کہ جس نے بچپن سے گھر میں جو دیکھا وہ کیا.. مطلب یہ کہ انسان ابتدائی طور پہ سیکھنے اور سمجھنے کا عمل اپنے گھر سر شروع کرتا ہے. اس لیے خاندان بہت میٹر کرتا ہے.

سگریٹ نوشی صحت کے لیے نقصان دہ ہے مگر اس کا لڑکی کی پڑھائی سے کوئی تعلق نہیں- اس طرح کی کیپشن سے ان لڑکیوں کا راستہ بند نہ کریں جو ایسا کچھ نہیں کرتیں-

یہ اپنے قول و فعل کی خود ذمہ دار ہے کیا اسکو کوئی مجبور کر رہا کہ وہ ایسا کرے۔ ساری تعلیم ہاسٹلز میں رہ کر حاصل کی مجال ہے کہ کوئی ایسی لت پڑی ہو۔ اچھائی اور بُرائی کرنے کا اختیار اپنے ہاتھ میں ہوتا اس میں پاکستان کا کیا قصور۔

یہ ڈرگ کیسے ان ہاسٹلوں پر پہنچ جاتی ہیں، اس ڈرگ مافیا اتنی بارسوخ ہیں کہ ان کو روکا نہ جاسکے۔ ایک گندی مچھلی پورے تالاب کو گندا کرتی ھے۔ یہ بیٹا بیٹی کا تماشہ چھوڑ دو اس کے سورسز کو عبرت کا نشان بنا دو چوک میں لٹکاو۔ ویسے سنا ھے لبرل خاندانوں یہ عام سی بات ھے

یہ غور طلب ھے اتنا مہنگا ڈرگ اتنی آسانی سے مل جاتا ہوگا غرباء کے بچوں کو ٹریپ کیا جاتا ہوگا اکثر ایک آدھ سٹوڈنٹ ان محفلوں کا روخ دیکھاتے ہونگے، لبرل کے بچے آدھے ہوتے ہیں گوروں کی طرح پیتے ہونگے، عام لوگوں کی طرح غڑپ غڑپ کرکے نہیں پیتے ہونگے؛ لبرل میں یہ ایک سمبل آف سٹیٹس ھے۔

 

Categories
Social

ساہیوال:محبت پانے کے لیے خاتون نے محبوب کی 4 سالہ بیٹی قتل کردی

ساہیوال:محبت پانے کے لیے خاتون نے محبوب کی 4 سالہ بیٹی قتل کردی

پولیس نے بتایا کہ ابتدائی معلومات کی رپورٹ (ایف آئی آر) اس شخص کے خلاف درج کی گئی ہے جس کی تحقیقات شروع کی گئی ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ابھی تک اس کیس میں کوئی گرفتاری عمل میں نہیں آئی ہے۔

پولیس نے بتایا کہ ملزم اپنے پڑوس میں رہنے والے ایک شخص سے شادی کرنا چاہتا تھا۔ وہ اپنی بیٹی کو ان کی شادی میں رکاوٹ سمجھتی تھی۔ چنانچہ اس نے یہ انتہائی قدم اٹھانے کا فیصلہ کیا۔ کہا جا رہا ہے کہ دونوں کے کچھ گہرے تعلقات بھی تھے۔

ساہیوال پولیس نے جمعرات کو ایک چار سالہ بچی کے مشتبہ قاتل کا سراغ لگانے کا دعویٰ کیا ہے۔

 

Categories
Social

What Happened to Ayesha on Minar e Pakistan Full Story in Urdu

لاہور پولیس نے منگل کو سینکڑوں نامعلوم افراد کے خلاف یوم آزادی کے موقع پر شہر کے گریٹر اقبال پارک میں ایک خاتون ٹک ٹاکر اور اس کے ساتھیوں پر حملہ اور چوری کرنے پر مقدمہ درج کیا۔

شکایت کنندہ نے بتایا کہ وہ چھ ساتھیوں کے ساتھ یوم آزادی کے موقع پر مینار پاکستان کے قریب ایک ویڈیو بنا رہی تھی جب 300 سے 400 افراد نے “ہم پر حملہ کیا”۔

اس نے کہا کہ اس نے اور اس کے ساتھیوں نے ہجوم سے بچنے کی بہت کوشش کی۔ صورتحال کا مشاہدہ کرتے ہوئے ، پارک کے سیکورٹی گارڈ نے مینار پاکستان کے اطراف میں دیوار کا دروازہ کھول دیا۔

تاہم ، ہجوم بہت بڑا تھا اور لوگ دیوار کو چھو رہے تھے اور ہماری طرف آرہے تھے۔ لوگ مجھے اس حد تک دھکیل رہے تھے اور کھینچ رہے تھے کہ انہوں نے میرے کپڑے پھاڑ ڈالے۔ کئی لوگوں نے میری مدد کرنے کی کوشش کی لیکن ہجوم بہت زیادہ تھا اور وہ مجھے ہوا میں پھینکتے رہے۔

اس نے مزید بتایا کہ اس کے ساتھیوں پر بھی حملہ کیا گیا۔ جدوجہد کے دوران ، اس کی انگوٹھی اور کان کی بالیاں “جبری طور پر لی گئیں” ، اس کے علاوہ اس کے ایک ساتھی کا موبائل فون ، اس کا شناختی کارڈ اور 15 ہزار روپے جو اس کے شخص کے پاس تھے۔

اس واقعے کی ایک ویڈیو آج کے اوائل میں سوشل میڈیا پر گردش کرنے لگی جس میں شہریوں نے ویڈیو میں مردوں کے اقدامات پر غصے کا اظہار کیا۔

تازہ ترین واقعہ جولائی میں نور مقدم اور قرul العین کے قتل کے بعد پاکستان میں خواتین کے خلاف تشدد پر توجہ مرکوز کرنے کے دوران سامنے آیا ہے۔

Exit mobile version